48

علاقہ گونسر میں ایک شخص کو قتل

ڈیرہ اسماعیل خان ( حسنین قریشی . ڈسٹرکٹ رپورٹر ) ساڈھے تین سال پہلے پروا کے علاقہ گونسر میں ایک شخص کو قتل کرنے والے اور ایک بچے سمیت دو خواتین کو شدید زخمی کرنے والے تینوں ملزمان کو ایڈیشنل سیشن جج نے بری کر دیا ،

جس پر زخمی ہونے والی خواتین اور بچے کی پریس کانفرنس ہائیکورٹ سے ملزمان کی رہائی کینسل کرنے اور انصاف کا مطالبہ اور دوسری جانب رہائی پانے والے ملزمان کی دو بارہ دھمکیوں پر پولیس انتظامیہ سے نوٹس لینے اور تحفظ کا مطالبہ تفصیلات کے مطابق تقریبا ساڈھے تین سال قبل پروا کے علاقہ گونسر میں مسلح ملزمان نے فائرنگ کر کے لطیف ولد امان اللہ اس کی ہمشیرہ یاسمین بی بی 10سالہ بھانجھی مسرت اور 5سالہ بھانجھا عادل عمر فائرنگ کے نتیجے میں شدید زخمی ہوئے تھے بعد ازاںطیف زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گیا .

زخمی لطیف کی مدعیت میں پروا پولیس نے تین ملزمان الطاف ولد ربنواز اقبال ولد غلام نبی اوررانجھو ولد سونا ساکنان گونسر کے خلاف مقدمہ درج کر کے گرفتار کیا تھا .


اس دوران ہائیکورٹ نے ملزمان کی دو مرتبہ ضمانت کینسل کی ساڈھے تین سال جیل گزارنے کے بعد ایڈیشنل سیشن جج نے ملزمان کو بری کر دیا جس پر مدعا علیہان کو شدید پریشانی ہے جس مدعا علیہان نے پریس کانفرنس میں کہا کہ ملزمان نے ہمارے ساتھ ظلم کیا ہے خواتین بچے زخمی ہوئے ایک گھر کا فرد جاں بحق ہو گیا

ملزمان کا بری ہو نا ہمارےلیے پریشان کن ہے ملزمان ہمین اب بھی دھمکیاں دے رہے ہیں ہماری جان کو خطرہ ہے ہمیں انصاف دیا جائے انتظامیہ آر پی او ڈی پی او نوٹس لیں دوسری جانب مدعا علیہان نے امید ظاہر کی ہے کہ ہائیکورٹ سے ہمیں انصاف ملے گا .

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں