34

تحقیقات کی ہدایت

خانقاہ ڈو گر اں ( احمد ناز . ڈ پٹی بیورو چیف ) سیکرٹری لوکل گورنمنٹ اینڈ کمیونٹی ڈویلپمنٹ سیف انجم پر مشتمل اتھارٹی نے ضلع شیخوپورہ میں کئی برس تک چیف آفیسر تحصیل میونسپل آفیسر ٹیکسیشن آفیسر کی حیثیت سے کام کرنے والے ملک محمد منشاء کے خلاف پنجاب امپلائز ایفی شنسی ڈسپلن اینڈ اکاؤنٹ بلٹی ایکٹ 2006ء کے تحت تحقیقات کی ہدایت جاری کردی ہے

اور ڈرائریکٹر لوکل گورنمنٹ اینڈ کمیونٹی ڈویلپمنٹ لاہور کو انکوائری آفیسر نامزد کیا گیا ہے ۔

اس بارے میں اتھارٹی کی طرف سے نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے ، جس میں کہا گیا ہے کہ ملک محمد منشاء سابق ٹی ایم او تحصیل میونسپل ایڈمنسٹریشن صفدرآباد جو آج کل چیف آفیسر ضلع کونسل نارووال تعینات ہے کے خلاف کرپشن ، نااہلی اور مس کنڈیکٹ کے الزامات کی بناء پر تحقیقات کی ہدایت جاری کی جارہی ہے ۔

جس پر واٹر سپلائی کی سکیموں میں کروڑوں روپے کی بدعنوانیاں کرنے کے الزام کے علاوہ سرکاری ریکارڈ میں ٹمپرنگ کرنے کا الزام بھی ہے جبکہ اس کے خلاف پراسیکیوشن کی طرف سے تین گواہ سابق ڈپٹی ڈائریکٹر اینٹی کرپشن شیخوپورہ میاں غلام رسول اسسٹنٹ ڈائریکٹراینٹی کرپشن میاں خالد محموداور خانقاہ ڈوگراں کا رہائشی شخص رانا شاہد پرویز پیش ہوں گے ۔

سیکرٹر ی لوکل گورنمنٹ نے انکوائری آفیسر کو ہدایت کی ہے کہ وہ انکوائری مکمل کرکے 60 روز میں اپنی سفارشات واضع طور پر مرتب کرکے پیش کریں دریں اثناء ملک محمد منشاء نے ان الزامات کی تصدیق نہ کی ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں