جسٹس اعجاز الاحسن کے ڈی جی ایل ڈی اے سے متعلق کیس میں ریمارکس

سپریم کورٹ میں ڈی جی ایل ڈی اے کو عہدے سے ہٹانے کے معاملے پر جسٹس اعجاز الاحسن نے ریمارکس دیئے ہیں کہ آپ کی نظرثانی درخواست غلط بیانی سے بھری پڑی ہے،کہا گیا ہے کہ پنجاب حکومت کو سنا ہی نہیں گیا تھا،چیف سیکرٹری اور وزیرہاو¿سنگ کے دستخط موجود ہیں۔

تفصیلات کے مطابق جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں 3رکنی بنچ نے ڈی جی ایل ڈی اے کو عہدے سے ہٹانے کا معاملہ پر پنجاب حکومت کی جانب سے دائر نظرثانی درخواست پر سماعت کی۔

ایڈووکیٹ جنرل نے کہا کہ عدالت نے ڈی جی ایل ڈی اے کو عہدے سے نہ ہٹانے کا حکم دیا۔جسٹس اعجاز الاحسن نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ آپ کی نظرثانی درخواست غلط بیانی سے بھری پڑی ہے،کہا گیا ہے کہ پنجاب حکومت کو سنا ہی نہیں گیا تھاجبکہ چیف سیکرٹری اور وزیرہاؤسنگ کے دستخط موجود ہیں۔

جسٹس فائزعیسیٰ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہاکہ کیا حکومت عہدے پر اپنا آدمی لگانا چاہتی ہے؟یہ کیس سپریم کورٹ تک آیا کیسے؟ایڈووکیٹ جنرل پنجاب نے کہا کہ عدالت نے معاملے پر سوموٹو لیا تھا۔

جسٹس گلزاراحمد نے کہا کہ آئندہ سماعت پر تمام ریکارڈ ساتھ لگائیں اور تیاری کرکے آئیں،عدالت نے سماعت غیرمعینہ مدت تک ملتوی کردی۔

نیوز ڈیسک

ای این این ٹی وی کا نیوز ڈیسک نمائندگان کی خبروں کے ساتھ ساتھ دنیا بھر میں رونما ہونے والے واقعات کو اپنی قارئین کے لیے اپنی ویب سائٹ پر شائع کرتا ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Next Post

کوئٹہ میں آلودہ سبزیاں كھانے سے شہری موذی امراض میں مبتلا ہونے لگے

جمعرات مارچ 14 , 2019
كوئٹہ میں گندے پانی كے ذریعے سبزیوں كی كاشت زور و شور سے جاری ہے جس سے شہری موذی امراض کا شکار ہورہے ہیں۔ اسپنی روڈ، كلی دیبہ، كلی ابراہیم زئی اور وحدت كالونی میں كھلے عام نالے كے گندے پانی كے ذریعے سبزیوں كی كاشت جاری ہے جس كے […]

کیلنڈر

اکتوبر 2021
پیر منگل بدھ جمعرات جمعہ ہفتہ اتوار
 123
45678910
11121314151617
18192021222324
25262728293031
%d bloggers like this: